’فواد عالم کو انصاف دو‘

کراچی: پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف سیلکٹر انضمام الحق نے دورہ انگلینڈ اور آئرلینڈ کے لیے 16 رکنی ٹیم کا اعلان کردیا جس میں ایک بار پھر بائیں ہاتھ سے کھیلنے والے بیٹسمین فواد عالم سلیکٹرز کا اعتماد حاصل کرنے میں ناکام رہے۔

پی سی بی کی جانب سے 23 اپریل سے شروع ہونے والے دورہ انگلینڈ کے لیے جس اسکواڈ کا اعلان کیا گیا اُس کی قیادت سرفراز احمد کو سونپی گئی اس کے علاوہ اظہر علی، سمیع اسلم، امام الحق، حارث سہیل، بابر اعظم، فخر زمان، اسد شفیق، عثمان صلاح الدین، شاداب خان، محمد عامر، محمد عباس، حسن علی، راحت علی، سعد علی، فہیم اشرف کو ٹیم میں شامل کیا گیا۔

بائیں ہاتھ سے کھیلنے والے 32 سالہ ٹیسٹ کرکٹر  فرسٹ کلاس کرکٹ میں اچھی کارکردگی دکھانے اور فٹنس میں خود کو بہترین ثابت کرنے کے باوجود سلیکشن کمیٹی کی توجہ حاصل کرنے میں ناکام رہے یا انہیں نظر انداز کیا گیا؟۔

چیف سلیکٹر کی جانب سے اسکواڈ کا اعلان اور فواد عالم کی ٹیم میں جگہ نہ بننے کے بعد سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر صارفین نے ٹیسٹ کرکٹر کے حق میں آواز بلند کی اور انہیں انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کیا۔

سوشل میڈیا صارفین میں سے اکثر کا ماننا ہے کہ فواد عالم چیف سیلکٹر کے بھانجے امام الحق کے مقابلے میں اچھے اور سینئر کھلاڑی ہیں اُس کے باوجود انہیں نظر انداز کیا جارہا ہے۔

سوشل میڈیا صارفین نے فواد عالم کے لیے اس قدر آواز اٹھائی کہ ہیش ٹیگ ٹاپ ٹرینڈ میں شامل ہوگیا۔

ایک صارف نے لکھا کہ فواد عالم کا فرسٹ کلاس ایوریج 55 ہے تو اس سے زیادہ کیا چاہیے؟ آخر کب تک برداشت کریں گے؟ ساتھ ہی اظہر اقبال نے لکھا کہ فواد آپ فکر نہ کریں ہم سب آپ کے ساتھ ہیں‘۔

یاسر قریشی نے لکھا کہ ’مجھے ٹیسٹ کرکٹ کے اسکواڈ کا شدت سے انتظار تھا مگر اب میں پاکستان کی سیریز کا کوئی میچ نہیں دیکھوں گا‘.

صارف مبشر نے لکھا کہ ’فواد عالم موجودہ وقت میں  پاکستان کی ڈومیسٹک کرکٹ کا بہترین کرکٹر ہے اور یہی اُن کا سب سے بڑا مسئلہ ہے‘۔

مینوئن کا کہنا تھا کہ ’میں فواد عالم کے ساتھ کھڑا ہوں جنہیں ذاتی پسند نہ پسند کا نشانہ بناتے ہوئے جان بوجھ کر نظر انداز کیا جارہا ہے‘۔

ہارون نامی صارف نے امام الحق اور فواد عالم کے کرکٹ کیرئر کا موازنہ پیش کیا۔

عباد سلیم کا بلے باز کے حق میں آواز اٹھاتے ہوئے کہنا تھا کہ ’تسلسل کے ساتھ اچھی کارکردگی دکھانے کے باوجود فواد عالم کو سلیکٹ نہیں کیا گیا جو کہ بہت برا اور متعصبانہ فیصلہ ہے‘۔

مزمل آصف کا کہناتھاکہ ’دورہ انگلینڈ کے لیے اعلان کردہ اسکواڈ کے بارے میں میرے پاس کوئی الفاظ نہیں ہیں‘۔

قطیبہ محمود نے لکھا کہ ’انضمام الحق کا آخر مسئلہ کیا ہے فواد عالم کو کیوں منتخب نہیں کیا گیا‘۔

واضح رہے کہ دورہ آئرلینڈ اور انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ میچز کے لیے قومی ٹیم کے 16 رکنی اسکواڈ کا اعلان کیا گیا، قومی کرکٹ ٹیم 23 اپریل کو انگینڈ کے لیے روانہ ہوگی۔

مزید پڑھیں: دورہ آٗئرلینڈ اور انگلینڈ کے لیے پاکستان کی 16 رکنی ٹیم کا اعلان

سرفراز الیون  آئرلینڈ سے واحد ٹیسٹ میچ 11 مئی کو کھیلے گی جبکہ  انگلینڈ اور پاکستان کے درمیان دو میچز کی سیریز کا پہلا ٹیسٹ 24 مئی اور دوسرا یکم جون کو کھیلا جائے گا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email



Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں