بھارت میں کرنسی نوٹوں کا بحران

نئی دہلی: بھارت کے مختلف شہروں میں ایک بار پھر نوٹوں کا بحران پیدا ہوگیا اور کئی ریاستوں میں بینک کی اے ٹی ایم مشینیں خالی ہوگئیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق مختلف ریاستوں اترپریش، مہارشٹرا ودیگر ریاستوں میں اچانک بینک کی اے ٹیم ایم مشینوں میں پیسے ختم ہوگئے جس کے بعد تقریباً پورے ہی ملک میں کرنسی نوٹوں کا بحرات پیدا ہوا۔

بھارتی وزیر خزانہ کا کہنا ہے کہ لوگوں نے اچانک بھاری رقوم نکلوائیں جس کی وجہ سے قلت پیدا ہوئی کیونکہ جب مارکیٹ کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا تو وہاں کیش موجود تھا۔

اُن کا کہنا تھا کہ کرنسی نوٹوں کی قلت عارضی ہے جلد صورتحال اپنے معمول پر آجائے گی لہذا عوام بے بنیاد باتوں پر دھیان نہ دیں اور افراتفری سے گریز کریں، متعلقہ حکام جلد از جلد معاملے کو حل کردیں گے۔

مزید پڑھیں: مودی کا فیصلہ، اپنی ہی 95 سالہ بوڑھی ماں کو قطار میں‌ لگنا پڑ گیا

وزیرخزانہ ارون جیٹلی کا کہنا تھا کہ متاثرہ ریاستوں میں آندھرا پردیش، بہار، گجرات، آسام، مدھیہ پردیش، مہارسٹرا، راجھستان اور اترپردیش شامل ہیں جبکہ دارالحکومت نئی دہلی میں بھی نوٹوں کی قلت کا سامنا ہے۔

بھارتی حکومت نے اچانک قلت پر تحقیقاتی کمیٹی قائم کردی جو اس بات کا تعین کرے گی کہ مصنوعی کرنسی نوٹوں کی اچانک قلت پر  رپورٹ مرتب کر کے وزراتِ خزانہ کو ارسال کرے گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں